Wednesday, March 3, 2021
malegaontimes

دِشا روی کی گرفتاری کے بعد زبردست ہنگامہ، سوشل میڈیا پر غم و غصہ کا اظہار

بنگلورو کی 21 سالہ سماجی کارکن دِشا روی کی گرفتاری کے بعد اتوار کے روز سوشل میڈیا پر کافی غم و غصہ پایا گیا۔ سیاست دانوں، ماہرین تعلیم، سماجی کارکنوں اوت صحافی جیسے لوگوں نے بھی ٹویٹر پر دشا روی کی گرفتاری پر شدید تنقید کی ہے۔

دہلی پولیس نے دشا روی پر الزام لگایا ہے کہ وہ سوشل میڈیا پر کسانوں کی حمایت میں بنائی گئی ایک متنازعہ ‘ٹول کٹ’ کو شیئر کررہی ہے۔ یہ وہی ٹول کٹ ہے جسے ماحولیاتی کارکن گریٹا تھنبرگ نے سوشل میڈیا پر شیئر کیا۔

Ayesha-ladies

سینئر کانگریس لیڈر پی چدمبرم نے ٹویٹ کیا، “ماؤنٹ کارمل کالج کی 21 سالہ طالبہ اور ماحولیات کی سرگرم کارکن دشا روی قوم کے لئے خطرہ کیسے بن گئی ہیں، لہذا اس کا مطلب یہ ہے کہ بھارت ایک بہت ہی کمزور بنیاد پر کھڑا ہے۔” ساتھ ہی کہا کہ، افسوس کی بات ہے کہ دہلی پولیس ظالموں کا ہتھیار بن چکی ہے۔ “

سی پی آئی کے جنرل سکریٹری سیتارام پچوری نے کہا کہ مودی سرکار کو لگتا ہے کہ کسانوں کی بیٹی کو گرفتار کرکے کسانوں کی تحریک کو کمزور کیا جاسکتا ہے۔ لیکن حقیقت میں یہ ملک کے نوجوانوں کو بیدار کرے گا اور جمہوریت کے لئے جدوجہد کو مستحکم کرے گا۔

mt ads

error: Content is protected !!