Friday, February 26, 2021
malegaontimes

مالیگاؤں شہر میں عوامی امدادی دواخانہ کا آغاز

مالیگاؤں : ریاست مہاراشٹر کے مسلم اکثریتی شہر مالیگاؤں میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد مسلسل اضافہ ہورہا ہے.اور شہر کے زیادہ تر نجی دواخانے و اسپتال بند ہیں.جس کی وجہ سے عام مریض کافی پریشان ہیں اور بروقت طبی امداد نہ ملنے سے کئی لوگوں کی اموات ہوچکی ہے.

مالیگاؤں شہر کی سٹی سیوا تنظیم کی جانب سے شہر کے معروف علاقے نیاپورہ میں عوامی امدادی دواخانے کی شروعات کی گئی ہے.

گزشتہ پانچ روز میں اس عارضی دواخانے سے ہزاروں مریضوں نے استفادہ حاصل کیا ہے.اس کلینک میں شہر کے چار ڈاکٹر طبی خدمات انجام دے رہے ہیں.الیکٹرونک میڈیا کے نمائندوں سے سٹی سیوا تنظیم کے ذمہ دار شفیق احمد وائرمین نے بات چیت کی.

شفیق احمد وائرمین نے بتایا کہ اس دواخانہ کا مقصد نان کووِڈ مریضوں کو انتہائی کم فیس یعنی دس روپیہ میں طبی خدمات فراہم کرنا ہے.عوامی امدادی دواخانہ کا وقت رمضان میں افطاری کے بعد سے رات گیارہ بجے تک کا ہے.

اس کلینک میں شہر کے چار ڈاکٹر طبی خدمات انجام دے رہے ہیں.انھوں نے مزید بتایا کہ یہاں روزانہ سو سے دو سو مریضوں کا معائنہ و علاج کیا جاتا ہے. شہر کے ہر علاقے کے مریض اس دواخانہ سے فیضیاب ہورہے ہیں.

شفیق وائرمین کے مطابق اس دواخانہ کے ساتھ ایک ایمرجنسی ایمبولینس کا انتظام میں کیا گیا ہے تاکہ ایمرجنسی کیسز میں کام آسکے اس کار خیر کو انجام دینے میں سٹی سیوا تنظیم کے اراکین اور نوجوانان محلہ انگنو سیٹھ ہر طرح کا تعاون پیش کر رہے ہیں.واضح رہے کہ شہر مالیگاؤں میں کورونا متاثرین کی تعداد 300 سے زائد بتائی جارہی ہے.اور اس وبأ سے ایک درج سے زائد لوگوں کی اموات درج کی گئی ہے.

لیکن شہر میں ایک مسلۂ یہ کہ دیگر امراض میں مبتلا سیکڑوں لاک ڈاؤن کے دوران اسپتال و دواخانے بند ہونے کے سبب موت کی آغوش میں چلے گئے ہیں. (بشکریہ مالیگاؤں لائیو)

error: Content is protected !!