Friday, March 5, 2021
malegaontimes

کورونا کے علاج میں منافع بخش منافع پر میکس ہیلتھ کیئر کی صفائی ، الزامات کو مکمل طور پر غلط کہا

میکس ہیلتھ کیئر نے کہا ہیکہ کوویڈ 19 کے علاج میں منافع بخش ہونے کے بارے میں جو الزامات عائد کیے جارہے ہیں وہ سراسر غلط ہیں۔  انہوں نے کہا کہ شرح کی فہرست جو علاج کی شرحوں کے حوالے سے ٹویٹر پر وائرل ہورہی ہے ، اس میں پورے حقائق شامل نہیں ہیں۔

max-hospital-charges

 میکس ہیلتھ کیئر نے بتایا کہ کوویڈ ۔19 میڈیکل مینجمنٹ کے لئے اس کی شرحیں تمام شمولیت کے ساتھ معیشت کے لئے 25،090 روپے ، جڑواں شیئرنگ وارڈوں کے لئے 27،100 روپے ، سنگل وارڈوں کے لئے 30،400 روپے ، آئی سی یو کے لئے 53،000 روپے اور وینٹیلیٹروں والے آئی سی یوز کیلئے ہیں۔  72،500 روپے۔  اس میں کمرے کا کرایہ ، گستاخانہ دورے ، سینئر کنسلٹنٹ وزٹ ، نرسنگ فیس ، معمول کے ادویات اور کوویڈ ۔19 علاج معالجے ، دیگر طبی مصنوعات اور تمام معمول کے پیتھولوجی ٹیسٹ شامل ہیں۔

 اسپتال نے کہا ہے کہ ہم قریب ایک ہزار کوویڈ ۔19  مریضوں  کا علاج کر رہے ہیں اور اب تک 2،000 سے زیادہ کوویڈ 19 مریضوں کا علاج کر چکے ہیں۔   ہمارے 1،970 صحت کارکن 24 گھنٹے مریضوں کی دیکھ بھال کر رہے ہیں۔  ہمارے 427 صحت کارکنان بھی بیمار ہوچکے ہیں اور انہیں داخل کرایا گیا ہے۔  ہمارے پاس عملہ قریب 3،220 ہے۔  پچھلے ڈھائی مہینوں سے  انہیں کام سے بھی ہٹا دیا گیا ہے ، اس کے باوجود ہم مسلسل خدمات انجام دے رہے ہیں۔

 میکس ہیلتھ کیئر کے سینئر ڈائریکٹر اور سی ایف او یوگیش سرین نے کہا کہ اس کے باوجود ہم پر منافع بخش الزام عائد کرنا سراسر غلط ہے ہم  کو بھاری نقصان اٹھانا پڑ رہا ہے۔  یہ بھی تب ہے جب ہم نے اپنے بہت سارے سینئر ڈاکٹروں اور انتظامی لوگوں کی تنخواہ میں 20 سے 50 فیصد تک کمی کردی ہے۔


error: Content is protected !!