Friday, March 5, 2021
malegaontimes

فائرنگ سے موت کے بعد نیپال کی پولیس نے ہندوستانی کی لاش کو گھسیٹا ، مقامی لوگوں میں ناراضگی

سنیچر کے دن نیپال پولیس نے ہندوستانی گاؤں کے لوگوں  پر فائرنگ کیر دی جسکے نتیجے میں سرحدی گاؤں جانکی نگر کا رہائشی 21 سالہ وکیش کمار مارا گیا۔  عینی شاہدین کا الزام ہے کہ وکیش کی موت کے بعد ، نیپال کے پولیس اہلکار اس کی لاش کو نیپال سرحد میں گھسیٹ کر لے گئے۔  جب مشتعل دیہاتیوں نے ہنگامہ برپا کردیا تو نیپال پولیس اہلکار لاش چھوڑ کر فرار ہوگئے۔  گاؤں کے لوگ اس واقعے سے سخت  ناراض ہیں۔

 ایس پی نے سرحد پر فائرنگ سے متعلق رپورٹ پیش کی ، نیپال نے ایک شخص کو حراست میں لیا:

 وکیش کے والد ناگیشور رائے نے کہا کہ میرے بیٹے نے کچھ نہیں کیا،   وہ  وہاں کھڑا تھا اور نیپال پولیس نے اسے گولی ماردی۔  گولی لگنے کے بعد ، میرے بیٹے کی لاش کو نیپال لے جایا گیا۔  ہم نے بہت احتجاج کیا اور اپنے بیٹے کی نعش لے کر واپس ہندوستان کی سرحد پر آئے۔  جائے وقوعہ پر موجود عینی شاہدین نے بھی ہند ، نیپال سرحد کے ساتھ ہی تعینات ساشاسترا سیما بال (ایس ایس بی) کے اہلکاروں سے ناراضگی کا اظہار کیا۔


error: Content is protected !!