Sunday, February 28, 2021
malegaontimes

بھارت میں ولیاکر سورج گرہن 21 جون کو نظر آئے گا

21 جون کو ہندوستان میں سورج گرہن دیکھا جائے گا اور ملک کے کچھ حصوں میں اسے سال بھر دیکھا جائے گا۔ اسسٹرو کے چاہنے والوں کو اس عرصے کے دوران “اگنی والا” دیکھنے کا موقع ملے گا۔ تاہم ملک کے بیشتر حصوں میں سورج گرہن جزوی ہوگا۔

رکن پارلیمنٹ برلا پلانٹیریم کے ڈائریکٹر دیوی پرساد دورائی نے بتایا کہ سورج گرہن کی سرکلر حرکت 10.12 بجے راجستھان کے گھڈسانا کے قریب شروع ہوگی اور رنگ مرحلہ صبح 11:49 بجے شروع ہوگا اور اس مرحلے کا اختتام 11:50 بجے ہوگا۔ راجستھان کے سورت گڑھ اور انوپ گڑھ ، سریسا، رتیہ اور ہریانہ کے کروروشیترا اور اترا کھنڈ کے دہرادون، چمبہ ، چمولی اور جوشی مٹھ جیسے علاقوں سے ایک منٹ کے “فائر آنگز” دکھائی دیں گے۔ درئی نے ایک بیان میں کہا کہ اس بار تاہم “فائر کی انگوٹھی” وہی نہیں ہوگی جیسا کہ گذشتہ سال 26 دسمبر کو دکھایا گیا تھا۔ اس بار یہ ہلکا ہلکا ہوگا۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ سورج گرہن جب سورج ، چاند اور زمین کی قطار میں آتے ہیں تو چاند گرہن ہوتا ہے۔ لیکن ملک کے بیشتر حصوں میں جزوی شمسی گرہن نظر آئے گا۔ کولکاتہ میں جزوی شمسی گرہن رات 10:46 بجے شروع ہوگا اور 2 بج کر 17 منٹ پر ختم ہوگا۔ تاہم دہلی میں یہ صبح 10:20 بجے سے 1:48 تک ، ممبئی میں صبح 10 بجے سے 1:27 تک ، چنئی میں صبح 10:22 سے 1:41 بجے اور بنگلورو میں صبح 10 بجے  سے  سہ پہر 1:31 تک دیکھا جائے گا۔

21 اگست کو آنے والا سورج گرہن سب سے پہلے افریقہ کے کانگو میں شروع ہوگا اور پھر جنوبی سوڈان، ایتھوپیا ، یمن، عمان، سعودی عرب، بحر ہند اور پاکستان سے ہوتا ہوا ہندوستان کے راجستھان سے ہوکر گزرے گا۔ اس کے بعد یہ تبت، چین، تائیوان کی طرف جائے گا اور پھر بحر الکاہل کے وسط میں اختتام پذیر ہوگا۔

Ad:


free-home-delivery


error: Content is protected !!