Wednesday, March 3, 2021
malegaontimes

سورت: آٹھویں جماعت کی طالبہ نے کی خودکشی، پوسٹ مارٹم رپورٹ میں آیا دو ماہ کی حاملہ تھی

گجرات کے سورت میں ایک حیران کرنے والا واقعہ پیش آیا ہے ۔ یہاں آٹھویں جماعت میں پڑھنے والی 14 سال کی ایک نابالغ لڑکی نے گھر پر خودکشی کرلی ۔ اس کے بعد جب اس کی لاش کا پوسٹ مارٹم کیا گیا تو پتہ چلا کہ وہ دو مہینے سے حاملہ تھی ۔ پولیس نے معاملہ درج کرکے جانچ شروع کردی ہے ۔ وہیں حمل میں پائے گئے جنین کے سیمپل کو بھی جانچ کیلئے لیباریٹری میں بھیج دیا گیا ہے ۔

یہ واقعہ سورت کے ان پاٹیا کے تروپتی نگر میں پیش آیا ہے ۔ وہاں رہنے والی طالبہ کا کنبہ آبائی طور سے بہار کے چھپڑا کا رہنے والا ہے ۔ اہل خانہ اتوار کو بہار جانے کی تیاری کررہے تھے ۔ جمعرات کو والد نے بیٹی سے 200 روپے لئے اور سبزی لانے کیلئے چلا گیا ۔ سبزیوں کے ساتھ لوٹے والد نے اپنی بیٹی کو اپنے گھر کی دوسری منزل پر لٹکا پایا ۔ 14 سالہ بیٹی نے دوپٹے کو پھانسی کا پھندہ بناکر خودکشی کرلی تھی۔پولیس نے جائے واقعہ پر پہنچ کر معاملہ درج کیا اور نابالغ لڑکی کی لاش کو پوسٹ مارٹ کیلئے سول اسپتال بھیج دیا ۔

پوسٹ مارٹم کرنے والے ڈاکٹر اونکا چودھری نے کہا کہ پوسٹ مارٹم میں نابالغ کی بچہ دانی میں جنین کی علامت سامنے آئی ہے ۔ نابالغ کا ٹیسٹ مثبت آیا ہے ۔ اس معاملہ کے بارے میں اہل خانہ کو جانکاری دینے پر ان کے پاوں تلے سے زمین کھسک گئی ۔ حالانکہ ڈاکٹر نے ایک رپورٹ کیلئے نابالغ کے ہسٹوپیتھولاجی کا ایک نمونہ لیباریٹری میں بھیجا ہے ۔

پولیس معاملہ کی جانچ کررہی ہے ۔ پولیس کو شک ہے کہ نابالغ لڑکی کا کسی کے ساتھ معاشقہ تھا ۔ اس کے بارے میں کنبہ کو پتہ نہ چلے ، اس لئے نابالغ نے خودکشی کرلی ہوگی ۔ پولیس نے بتایا کہ ابھی خودکشی کی بنیاد پر ہی جانچ کررہے ہیں ۔ ساتھ آبروریزی کے پہلو سے بھی جانچ کریں گے ۔

error: Content is protected !!