Friday, March 5, 2021
malegaontimes

سنی تعزیہ کمیٹی کی جانب سے اتی کرمن مکت گروپ، ادارہ ینگ نشاط، اور نوجوانانِ نشاط روڈ کا استقبال

گزشتہ دنوں لاک ڈاؤن اور کورونا مہا ماری کے دور میں ہر کوئی خود کی جان بچانے اور خود کے گھر میں چولہا کیسے جلے؟ اس فکر میں تھا، مگر ایسے سنگین حالات میں بھی کچھ لوگ محض ال کی ذات پر بھروسہ کرتے ہوئے اپنی جان جوکھم میں ڈال کر لوگوں کی خدمت کے لئے نکلے، اور پولس کے ڈنڈے کھا کر بھی لوگوں کی مدد کرنے میں لگے رہے، سنی تعزیہ کمیٹی نے ایسے مخلص نوجوانوں کی حوصلہ افزائی کرنے، اور شہریان کی جانب سے ان کا شکریہ ادا کرنے کا کام شروع کیا ہے۔

اسی مقصد سے آج سنی تعزیہ کمیٹی کے اراکین بڑی تعداد میں اسلام پورہ، نشاط روڈ پر پہنچ کر آتی کرمن مکت گروپ، ادارہ ینگ نشاط، اور نوجوانانِ نشاط روڈ کو پھولوں کا نذرانہ پیش کر کے مبارکباد دی. اور ان نوجوانوں کے ذمہ داران کو شال دے کر عزت افزائی کی گئی.

اسی طرح ان نوجوانوں کو مومنٹو کے طور ایک خوبصورت اور با مقصد سرٹیفکیٹ بھی دیا گیا. نشاط روڈ اور دیگر محلوں کے یہ نوجوانوں مسلسل دو مہینے تک اسی جگہ سے لوگوں کے تعاون سے کھانا پکاتے، اسے پیکنگ کرتے، اور کورونا کے مریض جن جن دواخانوں میں ایڈمٹ تھے، وہاں جاکر پہنچاتے، کورونا مریضوں کے رشتے داروں کو مختلف اسکولوں میں کورنٹائین رکھا گیا تھا، ان کے لئے بھی کھانا پکانے اور پہنچانے کا کیا. ایک وقت میں سات سو آٹھ سو لوگوں کو کھانا پہنچانے کی ضرورت پڑی، تب بھی یہ پیچھے نہیں ہٹتے تھے. اس کام کے ساتھ ساتھ کبھی کوپن کے ذریعے اور کبھی مفت پکا ہوا کھانا تو کبھی ریلیف کے سامان غریبوں اور ضرورت مندوں کے گھروں تک پہنچانے کا کام کیا.

malegaon-4

محمد سلیم عرف دال پہلوان کی صدارت میں ایک چھوٹی سی تقریب میں نوجوانوں کے ذمہ داران میں عرفان شاہد، عبدالرشید، بلال احمد، محی الدین، عتیق الرحمن، اعجاز اوٹے پہلوان،عتیق تعزیہ والے، ارشد پٹھان، حیدر علی سر، شوکت عزیز بھی موجود تھے، جبکہ سنی تعزیہ کمیٹی کے صدر ریاض احمد عطر والے، نائب صدر جمال بھیا، سکریٹری جاوید انور، خازن عبدالودود سالکی اشرفی، محمد رمضان محمد عباس، شفیق حسن، محمد سلیم پیر محمد، عمر فاروق، سہیل احمد، محمد عاقب، محمد خالد، عثمان غنی، نہال لیڈر، فیض عالم، اشفاق احمد، حافظ محمد جاوید نوری، انجمن حیدر کرار گروپ، اور دیگر اراکین کے ساتھ خصوصی طور کارپوریشن کے ریٹائرڈ آفیسر اشفاق صاحب بھی موجود تھے.

بشکریہ سُنّی تعزیہ کمیٹی

Ad:


free-home-delivery


error: Content is protected !!