Saturday, March 6, 2021
malegaontimes

ورلڈ اکنامی فورم نے ظاہر کی پوری دنیا کی آلودگی کی رپورٹ، 50فیصد آلودگی صرف اس وجہ سے ہوتی ہے

پوری دنیا میں چیزوں کی نقل و حرکت کی وجہ سے بہت زیادہ آلودگی پائی جاتی ہے۔ ایسی ہی کچھ 8اشیاء کی سپلائی چَین پوری دنیا میں 50 فیصد آلودگی کا سبب ہے۔ یہ کھانے، تعمیرات، فیشن، الیکٹرانکس، آٹو موبائل، سفر اور سامان کی فراہمی کے دیگر وجوہات کی وجہ سے ہیں۔ اگر ان سپلائی چَین کی وجہ سے ہونے والی آلودگی کو کم کرنے کے لئے اقدامات اٹھائے جائیں تو ان سامان کی قیمت میں صرف 1 سے 4 فیصد تک اضافہ ہوسکتا ہے، لیکن دنیا سے آلودگی کا بوجھ کافی حد تک کم ہوجائے گا۔ ڈبلیو ای ایف (ورلڈ اکانومی فورم) کی ایک نئی رپورٹ میں یہ دعویٰ کیا گیا ہے۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ سپلائی چَین سے کاربن کے اخراج کو کم کرنا، آلودگی کے معاملے میں بڑی تبدیلیاں لاسکتا ہے۔ اس کی مدد سے موسمیاتی تبدیلیوں کے خلاف جنگ جیتی جا سکتی ہے۔ دنیا کا 90 فیصد کاروبار چھوٹے اور درمیانے درجے کے کاروباری اداروں سے ہوتا ہے، جو سپلائی چَین کے ساتھ مل کر کام کرتے ہیں۔ رپورٹ کے مطابق، کسی کمپنی کو کسی صارف تک مصنوعات پہنچانے کے لئے زیادہ کاربن کے اخراج کی ضرورت پڑتی ہے۔ لہذا، سپلائی چَین سے اخراج کو کم کرنا زیادہ فائدہ مند ہوگا۔

فوڈ سپلائی چَین میں کاربن کے اخراج کا 25فیصد حصہ ہے۔ اسی کے ساتھ، تعمیرات (سیمنٹ ، اسٹیل اور پلاسٹک وغیرہ) سے 10 فیصد، فیشن سے 5 فیصد، ایف ایم سی جی سے 5 فیصد، الیکٹرانکس سے 5 فیصد، آٹو سے 2 فیصد، پیشہ ورانہ سروس سے 2 فیصد (بزنس ٹراویل آفس) اور دوسرے مال برداری سے 5 فیصد ہوتا ہے۔

اس آلودگی کو 40 فیصد کم کرنے کے لئے جو تکنیک اختیار کی جائے گی اس سے اشیا کی قیمت پر زیادہ اثر نہیں پڑے گا۔ مثال کے طور پر ، آٹوموٹیو جیسے کار کی قیمت میں تقریبا 2 فیصد اضافہ ہوگا۔ کپڑے کی قیمتوں میں 2 فیصد، کھانے کی قیمتوں میں 4 فیصد، تیاری کی لاگت میں 3 فیصد اور الیکٹرانکس کی قیمت میں صرف 1 فیصد اضافہ ہوگا۔

لینزنگ کے سی ای او اسٹیفن ڈوبوکجی کا کہنا ہے کہ ہمیں صارفین کو بھی آگاہ کرنا ہوگا کہ سبز مصنوعات خریدنا ایک بہتر اختیار ہے۔ وہ تھوڑی زیادہ قیمت ادا کرکے بہت بڑا اثر ڈال سکتے ہیں۔

آلودگی کم کرنے کیلئے کس سیکٹر میں کیا کرنا ہے:

جنگلات کاٹنے کے بغیر فوڈ پلاسٹک کی پیکیجنگ کو کم کرنا اور کاشت کرنا پڑے گا۔

تعمیر- سیمنٹ، ایلومینیم یا پلاسٹک، جسے کسی عمارت وغیرہ کے ٹوٹنے کی وجہ سے ہٹانا پڑتا ہے، اسے ری سائیکل کرنا پڑے گا۔

قابل تجدید توانائی اور کم اخراج ٹرانسپورٹ کو ہر سطح پر فروغ دینا ہوگا۔

کپڑے بنانے کیلئے اور سلائی کے لئے کم توانائی استعمال کرنے والی مشینری کا استعمال کرنا پڑے گا۔

اسی طرح، دوسرے شعبوں میں پلاسٹک یا مصنوعی چیزون کی ری سائیکلنگ قابل تجدید توانائی سے اخراج کو بہت کم کرکے حاصل کی جاسکتی ہے۔

ایک ہی وقت میں پیشہ وارانہ میٹنگ کرکے 10 فیصد آلودگی کو کم کیا جاسکتا ہے۔

error: Content is protected !!